دل دیاں گللاں،صفہ نمبرتین،شاعردانیال ملک

دل دیاں گللاں،صفہ نمبرتین،شاعردانیال ملک

جن سجدو میں سر جھکتا تھا اب اہ وہاں نکلتی ہے
پہلے باتوں پے وقت گزرتا تھا اب ملاقاتوں پے زندگی گزرتی ہے

میں کیا سے کیا ہو گیا محبت میں کوئی بتاے مجھے
پہلے نفرت ہوا کرتی تھی اب اسکے بے غیر دل نہیں لگتا

سردیوں کی شام میں ہاتھ میں ہاتھ لیے بیٹھے ہے
ایک ہی چادر میں دونو سر لگاے بیٹھے ہے

دل دیاں گللاں،صفہ نمبرتین،شاعردانیا ملک

Copyrights © 2019. All rights reserved. www.pakistanonline.org

Daniyal Malik

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *